kal raat urr rahay thay

کل رات اُڑ رہے تھے
 ستارے ہوا کے ساتھ
اور میں اُداس بیٹھا تھا
اپنے خُدا کے ساتھ
کہ یا تو قبولیت کے
 طریقے سکھا مُجھے
یا میرے دل کو باندھ دے اپنی رضا کے ساتھ

kal raat urr rahay thay
setaaray howa ke sath
aur mein udas betha tha
apne khuda ke sath
ke ya to qabuliat ke
tareeqay sikha mujhe
ya mere dil ko bandh day
apni Raza ke sath